Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - اگر شوہر بغیر وجہ کے اپنی بیوی سے مباشرت نہ کرے تو شریعت کا کیا حکم ہے؟

اگر شوہر بغیر وجہ کے اپنی بیوی سے مباشرت نہ کرے تو شریعت کا کیا حکم ہے؟

موضوع: معاشرتی آداب   |  خواتین کے حقوق و فرائض

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد خبیب       مقام: گوجرنوالا

سوال نمبر 3466:
السلام علیکم! اگر شوہر شادی کے بعد پہلا ہفتہ اپنی بیوی کے ساتھ بغیر وجہ کے صحبت نہ کرنا چاہے تو اس بارے میں شریعت کا کیا حکم ہے؟

جواب:

اگر میاں بیوی دونوں صحت مند ہوں اور تھکاوٹ وغیرہ نہ ہو تو بلا وجہ صحبت نہ کرنے کا کوئی جواز نہیں ہے۔ شرعی طور پر ایسی کوئی پابندی نہیں ہے۔ اگر فریقین کا مشورہ ہو تو صحبت کرسکتے ہیں۔ اگر ایک فریق زبردستی کرے گا تو اس سے ازداجی زندگی ناخوش گوار ہوسکتی ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

تاریخ اشاعت: 2015-01-23


Your Comments