Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - نفلی اور سنت روزے میں فرق کیا ہے؟

نفلی اور سنت روزے میں فرق کیا ہے؟

موضوع: عبادات  |  اقسام روزہ

سوال پوچھنے والے کا نام: ایاز علی       مقام: گجرانوالہ، پاکستان

سوال نمبر 2509:
السلام علیکم آپ ہی کے سوال نمبر 270 میں نفلی روزے اور سنت روزے کا بتایا گیا ہے۔ سنت (محرم الحرام کی نویں اور دسویں تاریخ کے روزے، عرفہ یعنی نویں ذی الحجہ کا روزہ اور ایامِ بیض یعنی ہر قمری مہینے کی تیرہویں، چودہویں اور پندرہویں تاریخ کے روزے) نفل (ماہ شوال کے چھ روزے، ماہ شعبان کی پندرہویں تاریخ کا روزہ، سوموار، جمعرات اور جمعہ کا روزہ) میرا سوال یہ ہے کہ نفلی روزے اور سنت روزے میں فرق تفصیل سے بتا دیں۔ اللہ آپ کو اس کی جزا دے۔

جواب:

فرض اور واجب کے علاوہ تمام عبادات نفلی ہی ہوتی ہیں۔ جن میں زیادہ تاکید پائی جائے انہیں سنت کا درجہ دے دیا گیا ہے، پھر سنت مؤکدہ اور سنت غیر مؤکدہ میں بھی تقسیم کیا گیا ہے۔ یہ فقہاء کی اصطلاحات ہیں۔ انہوں نے درجہ بندی کی ہے۔ لہذا فرض اور واجب روزوں کے علاوہ سب نفلی روزے ہی ہوتے ہیں لیکن جن کے بارے میں حضور صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے زیادہ تاکید فرمائی یا ان کو رکھنے کا اہتمام زیادہ فرمایا وہ سنت ہیں جبکہ باقی کو صرف نفل شمار کرتے ہیں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2013-04-04


Your Comments