کیا مردوں اور عورتوں کا اکٹھا ہو کر ایک ہی جگہ واعظ و نصیحت سننا‌ جائز ہے؟

سوال نمبر:1042
مردوں اور عورتوں کا اکٹھا ہو کر ایک ہی جگہ مسجد یا کسی ہال میں واعظ و نصیحت سننا کیسا ہے؟ جب کے پردہ کا بھی انتظام نہ ہو، برائے مہربانی راہنمائی فرمائیے۔ جزاکم اللہ

  • سائل: محمد عمر الحقمقام: ڈنمارک
  • تاریخ اشاعت: 16 جون 2011ء

زمرہ: مسجد کے احکام و آداب  |  متفرق مسائل

جواب:
مردوں اور عورتوں کا اختلاط حرام ہے البتہ کسی محفل میں شرکت کے دوران مناسب پردہ میں الگ الگ بیٹھے ہوں تو کوئی حرج نہیں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: صاحبزادہ بدر عالم جان

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • کاروباری شراکت کے اسلامی اصول کیا ہیں؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟