سونے چاندی پر زکوٰۃ کب فرض ہوتی ہے؟

سوال نمبر:260
سونے چاندی پر زکوٰۃ کب فرض ہوتی ہے؟

  • تاریخ اشاعت: 24 جنوری 2011ء

زمرہ: زکوۃ

جواب:

جب سونے کا نصاب ساڑھے سات تولے اور چاندی کا نصاب ساڑھے باون (52) تولے ہو تو سونا اور چاندی میں چالیسواں حصہ یعنی اڑھائی فیصد کے حساب سے نکال کر زکوٰۃ ادا کرنا فرض ہو جاتی ہے۔ یہ ضروری نہیں کہ سونے کی زکوٰۃ میں سونا اور چاندی کی زکوٰۃ میں چاندی ہی دی جائے بلکہ یہ بھی جائز ہے کہ سونے چاندی کی قیمت لگا کر اتنی رقم زکوٰۃ کے طور پر دے دی جائے۔

1. مرغينانی، بداية المبتدی، 1 : 25
2. زحيلی، الفقه الاسلامی وادلته، 2 : 767
3. حصکفی، الدرالمختار، 1 : 134

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟