Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا بنک میں کرنٹ اکاؤنٹ رکھنے کی صورت میں آپ ایسے ادارے کی مدد نہیں کرتے جو سود پر چلتا ہے؟

کیا بنک میں کرنٹ اکاؤنٹ رکھنے کی صورت میں آپ ایسے ادارے کی مدد نہیں کرتے جو سود پر چلتا ہے؟

موضوع: کرنٹ اکاؤنٹ   |  جدید فقہی مسائل

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد وقاص احمد       مقام: لاہور، پاکستان

سوال نمبر 786:
کیا بنک میں کرنٹ اکاؤنٹ رکھنے کی صورت میں آپ ایسے ادارے کی مدد نہیں کرتے جو سود پر چلتا ہے، چاہے آپ منافع نا لیں لیکن آپ کے کرنٹ اکاؤنٹ سے پیسے تو سود پر ہی دیے جاتے ہیں؟

جواب:
مال کو حفاظت کی نیت سے کرنٹ اکاونٹ میں رکھنا جائز ہے۔ نیت فقط حفاظت کی ہو۔ آج کل حالات ایسے ہیں کہ اپنے مال کی حفاظت کرنا بھی مشکل ہو گیا ہے ڈاکہ سرقہ لوٹ مار وغیرہ کا اندیشہ ہوتا ہے اور بعض اوقات نوبت صاحب مال کے قتل تک پہنچ جاتی ہے۔ اسلیئے نیت یہ ھونی چاہیئے کہ رقم محفوظ ہو۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2011-03-17


Your Comments