Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - ماہِ رمضان میں اگر کسی کا روزہ ٹوٹ جائے تو کیا پھر اس کے لئے کھانا پینا جائز ہے؟

ماہِ رمضان میں اگر کسی کا روزہ ٹوٹ جائے تو کیا پھر اس کے لئے کھانا پینا جائز ہے؟

موضوع: عبادات  |  روزہ

سوال نمبر 613:
ماہِ رمضان میں اگر کسی کا روزہ ٹوٹ جائے تو کیا پھر اس کے لئے کھانا پینا جائز ہے؟

جواب:

:  رمضان المبارک میں اگر کسی صحت مند شخص کا روزہ ٹوٹ جائے تو وہ رمضان المبارک کے احترام میں شام تک کھانے پینے سے رکا رہے۔ اسی طرح اگر مسافر دن میں اپنے گھر آجائے یا نابالغ لڑکا بالغ ہو جائے یا حیض و نفاس والی عورت پاک ہو جائے یا مجنوں تندرست ہو جائے تو باقی دن میں شام تک روزہ داروں کی طرح رہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔


Your Comments