آئمہ اربعہ کے نزدیک داڑھی کی شرعی مقدار کتنی ہے؟

سوال نمبر:3888
السلام علیکم! آئمہ اربعہ کے نزدیک داڑھی کی مقدار کتنی ہے؟ گزارش ہے کہ دلائل کامل کے ساتھ جواب عنایت فرمائیں۔

  • سائل: غلام یاسین سیفیمقام: رامپور، انڈیا
  • تاریخ اشاعت: 27 اپریل 2016ء

زمرہ: داڑھی کی شرعی حیثیت

جواب:

اہلِ سنت کے آئمہ اربعہ کے نزدیک داڑھی مونڈھنا بالاتفاق حرام اور قبضہ سے زائد کاٹنا سنت ہے۔ شوافع کے نزدیک مبالغہ کی حد تک کاٹنا مکروہ ہے۔ داڑھی کی مقدار کے بارے میں آئمہ اربعہ کے مؤقف اور دلائل جاننے کے لیے ملاحظہ کیجیے:

داڑھی کی شرعی حیثیت کیا ہے؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟