Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا عیدین کے درمیانی عرصہ میں شادی کرنا درست ہے؟

کیا عیدین کے درمیانی عرصہ میں شادی کرنا درست ہے؟

موضوع: معاشرتی آداب   |  متفرق مسائل

سوال پوچھنے والے کا نام: ریاض احمد ڈار       مقام: سنگاپور

سوال نمبر 3243:
کیا عید الفطر اور عید الاضحیٰ کے درمیانی عرصہ میں شادی کرنا درست ہے؟

جواب:

محرم الحرام کے ایام میں شادی کرنا اخلاقاً اچھا نہیں ہے۔ اگر ہمارے محلے یا رشتہ داروں میں کوئی فوت ہو جائے، تو ہم اپنا شادی وغیرہ کا پروگرام تبدیل کر دیتے ہیں، یا انتہائی سادگی سے کرتے ہیں۔ اسی طرح اہلِ بیت رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم پر میدانِ کربلا میں ماہِ محرم میں جو مصیبت بیتی، اس کے غم اور اہلِ بیت سے محبت کا تقاضا ہے کہ ان ایام میں شادی یا دیگر خوشی کے پروگرام نہ کیے جائیں۔ لیکن شرعاً ایسی کوئی ممانعت نہیں ہے۔

ان مذکورہ بالا ایام کے علاوہ سال کے جس دن آپ اپنی سہولت کے مطابق شادی کا پروگرام کرنا چاہیں، کر سکتے ہیں۔ لہٰذا عیدین کے درمیانی عرصہ میں بھی شادی کرنا شرعاً منع نہیں ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-05-30


Your Comments