Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا خفیہ نکاح کے بعد اسی لڑکی سے اعلانیہ نکاح کرنا جائز ہے؟

کیا خفیہ نکاح کے بعد اسی لڑکی سے اعلانیہ نکاح کرنا جائز ہے؟

موضوع: ارکان نکاح   |  نکاح

سوال پوچھنے والے کا نام: ایاز       مقام: کراچی

سوال نمبر 3190:
السلام علیکم! اگر کسی لڑکے نے لڑکی سے خفیہ طور پر نکاح کر لیا ہو اور وہ دبارہ لوگوں کے سامنے کرنا چاہتا ہو، تو اس کے بارے میں کیا حکم ہے؟

جواب:

اگر تو لڑکے اور لڑکی نے دو عاقل، بالغ، مسلمان گواہوں کی موجودگی میں بعوض حق مہر رضا مندی سے نکاح کیا تو پہلے والا نکاح درست اور قائم ہے، اور دوبارہ لوگوں کے سامنے بھی کرسکتے ہیں۔ اگر انہوں نے خفیہ طور پر اس طرح نکاح کیا کہ دونوں نے بیٹھ کر گواہوں کے بغیر ایجاب و قبول کر لیا تو پہلے والا نکاح منعقد ہی نہیں ہوا، اس صورت میں دوسرا نکاح کرنا ضروری ہے۔ بہر حال دونوں صورتوں میں وہ لوگوں کے سامنے دوبارہ نکاح کر سکتے ہیں، اس میں کوئی ممانعت نہیں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-07-04


Your Comments