Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا ہر خشک چیز پاک ہوتی ہے؟

کیا ہر خشک چیز پاک ہوتی ہے؟

موضوع: طہارت

سوال پوچھنے والے کا نام: فیصل       مقام: پاکستان

سوال نمبر 3088:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ ہر خشک چیز پاک ہوتی ہے کو تفصیل سے اور مثالوں سے سمجھا دی جائے، جیسے خشک زمین، کار کے خشک ٹائر، خشک جوتے وغیرہ اور اگر کوئی نجس چیز جو خشک ہو ئی ہو اس کو چھونے والا جہاں جہاں ہاتھ لگائے گا کیا وہ چیزیں پاک رہیں گی۔

جواب:

اگر گندگی نہ لگی ہوئی ہو یعنی گاڑی کے ٹائر، جوتے یا زمین خشک ہوں اور ان پر کوئی نجس چیز نظر نہ آ رہی ہو تو وہ پاک ہوتی ہیں، ان کو ہاتھ لگانے سے ہاتھ ناپاک (نجس) نہیں ہو جاتا کہ وہ ہاتھ بھی آگے جس چیز کو لگائے جائیں تو وہ بھی ناپاک ہو جائے، ایسا ہرگز نہیں ہے۔ دیگر چیزوں کے ساتھ بھی یہی معاملہ ہے جو خود نجس نہیں ہیں لیکن ان کو نجاست لگے پھر وہ زمین سے رگڑ کھانے کے بعد صاف ہو جائیں تو وہ پاک ہو جاتی ہیں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-02-15


Your Comments