Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا ایک وقت میں تین طلاقیں واقع ہو جاتی ہیں؟

کیا ایک وقت میں تین طلاقیں واقع ہو جاتی ہیں؟

موضوع: طلاق

سوال پوچھنے والے کا نام: فہیم نیازی       مقام: لاہور

سوال نمبر 3048:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ اگر کوئی ایک وقت میں 3 طلاق دے تو کیا طلاق ہو جاتی ہے؟

جواب:

اگر کوئی نارمل حالت میں طلاق دے جتنی بار دے گا اتنی بار ہی ہو جائے گی۔ لیکن جو بھی طلاق دے اس کی صورت حال الگ الگ ہو سکتی ہے اس لیے کسی عالم دین سے معلوم کر لینا ضروری ہوتا ہے کہ کیا الفاظ بولے ہیں؟ کس حالت میں بولے ہیں؟ پہلے کیا الفاظ بولے؟ کتنی مربتہ بولے؟ ان سب صورتوں کا جاننا ضروری ہوتا ہے۔ لہذا حتمی فیصلہ ہر بندے کی صورت حال کے مطابق ہی ہو سکتا ہے۔

مزید وضاحت کے لیے درج ذیل سوالات پر کلک کریں

  1. کیا انتہائی غصہ میں طلاق واقع ہو جاتی ہے؟
  2. کس صورت میں طلاق ثلاثہ کو ایک طلاق مانا جائے گا؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-03-05


Your Comments