Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا کوئی شخص زانیہ عورت سے پیدا شدہ لڑکی کا نکاح اپنی منکوحہ بیوی سے پیدا شدہ لڑکے سے کر سکتا ہے؟

کیا کوئی شخص زانیہ عورت سے پیدا شدہ لڑکی کا نکاح اپنی منکوحہ بیوی سے پیدا شدہ لڑکے سے کر سکتا ہے؟

موضوع: متفرق مسائل  |  نکاح

سوال پوچھنے والے کا نام: محبتی مورزادو گورشانی       مقام: جیکب آباد سندھ

سوال نمبر 2929:
ایک شخص نے کسی عورت سے زنا کیا، جس سے وہ حاملہ ہو گئ اور وضع حمل کی صورت میں لڑکی پیدا ہوئی، کیا یہ شخص اپنی منکوحہ بیوی سے پیدا شدہ لڑکے کے ساتھ اس زانیہ عورت کی بیٹی کا نکاح کر سکتا ہے۔

جواب:

ماں یا باپ دونوں میں سے کوئی بھی مشترک ہو تو نکاح جائز نہیں ہے۔ تولد نکاح سے ہو یا بدکاری سے دونوں صورتوں میں ایسے بچوں کا آپس میں نکاح نہیں ہو سکتا۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-01-30


Your Comments