وتر کی نماز دو رکعات علیحدہ اور ایک علیحدہ پڑھنا کیسا ہے؟

سوال نمبر:2087
بعض ممالک میں وتر کی نماز دو رکعات علیحدہ اور ایک رکعت علیحدہ پڑھی جاتی ہے کیا ہمیں جماعت کے ساتھ وتر ادا کرنے چاہیے یا الگ پڑھنی چاہیے (رمضان میں مسئلہ ہوتا ہے)۔

  • سائل: محمد اکرممقام: تلہ گنگ
  • تاریخ اشاعت: 06 ستمبر 2012ء

زمرہ: نماز وتر

جواب:

احناف کے نزدیک ایسا جائز نہیں ہے۔ وتر کی تینوں رکعات ایک ہی سلام کے ساتھ پڑھنی چاہیے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: حافظ محمد اشتیاق الازہری

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟