حضرت خضر علیہ السلام اور حضرت لقمان علیہ السلام نبی تھے یا ولی؟

سوال نمبر:1607
السلام علیکم حضرت خضر علیہ السلام اور حضرت لقمان علیہ السلام نبی تھے یا ولی؟ دلیل کے ساتھ بیان کریں

  • سائل: طیب طاہرمقام: کالا گجراں ، جہلم
  • تاریخ اشاعت: 03 اپریل 2012ء

زمرہ: متفرق مسائل

جواب:

حضرت خضر علیہ السلام اللہ تعالی کے نبی ہیں یہی جمہور علماء کرام کا مذہب ہے۔

حضرت خضر علیہ السلام کے بارے میں علماء کے درمیان اختلاف ہے بعض نے کہا کہ آپ ولی ہیں بعض نے کہا کہ  آپ نبی ہیں اور بعض کا قول ہے کہ آپ فرشتہ ہیں مگر جمہور علماء کرام نے کہا ہے کہ حضرت خضر علیہ السلام اللہ کے نبی ہیں۔

الجامع الاحکام القرآن ج : 10، ص : 391، مطبوع دار الفکر بيروت

البحر المحيط ج : 7، ص : 204،

النکت والعيون ج : 6، ص : 325، مؤسس الکتب الثقافيه بيروت

تدبر القرآن ج : 6، ص : 606، مطبوعه فاران فاؤنديشن لاهور

معارف القرآن ج : 5، ص : 612، مطبوعه اداره المعارف کراچی

حضرت لقمان علیہ السلام اللہ تعالی کے ولی ہیں یہی جمہور علما کرام کا مختار مذہب ہے۔

حضرت لقمان علیہ السلام کے بارے میں علماء کے درمیان اختلاف ہے بعض نے آپ کو نبی کہا اور بعض نے ولی کہا ہے۔ مگر جمہور علماء کا قول ہے کہ آپ ولی ہیں، آپ پر نبوت اور حکمت دونوں پیش کی گئی اور آپ کو ان میں سے کسی ایک کو اختیار کرنے کو کہا گیا  تو آپ نے نبوت کو چھوڑ دیا اور حکمت کو اختیار کر لیا۔ لہذا آپ ولی ہیں نبی نہیں۔

تفسیر امام ابن ابی حاتم حديث رقم : 17530

الفردوس بماثور الخطاب حديث رقم : 5384

تاريخ دمشق الکبير ج : 19، ص : 62، حديث رقم : 4139

تفسير الثعالبی، ج : 4، ص : 319

الجامع الاحکام القرآن، جز : 14، ص : 55 تا 57

تفسير ابن کثير، ج : 3، ص : 314

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: حافظ محمد اشتیاق الازہری

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟