Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - استحاضہ کی صورت میں نماز کا کیا حکم ہوگا؟

استحاضہ کی صورت میں نماز کا کیا حکم ہوگا؟

موضوع: عبادات  |  استحاضہ   |  نماز

سوال پوچھنے والے کا نام: کوثر       مقام: پاکستان

سوال نمبر 1432:
السلام علیکم میں حاملہ ہوں اور مجھے کبھی کبھی بلیڈنگ ہوتی ہے جو کہ کبھی زیادہ اور کبھی کم ہوتی ہے، یہ مسئلہ میرے ساتھ دو ماہ سے ہو رہا ہے۔ ایسی صورت میں میرے لیے نماز کا کیا حکم ہے؟ کیا جس طرح ماہواری کے ایام میں نماز معاف ہوتی ہے اس صورت میں بھی معاف ہوگی یا مجھے قضا پڑھنی ہوگی۔ براہِ مہربانی راہنمائی فرمائے۔

جواب:

اسے استحاضہ کہتے ہیں، یعنی بیماری کا خون۔ ایسی صورت میں آپ ہر نماز نیا وضو کر کے ادا کیا کریں۔ نہ تو اس صورت میں آپ کو نماز معاف ہے اور نہ ہی آپ نماز قضاء کرسکتی ہیں۔ بلکہ ہر نماز کے لیے نیا وضو کریں اور اسے وضو کریں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: حافظ محمد اشتیاق الازہری

تاریخ اشاعت: 2012-02-15


Your Comments