Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا ورثاء کا میت کی طرف سے لین دین کا اعلان کرنا جائز ہے؟

کیا ورثاء کا میت کی طرف سے لین دین کا اعلان کرنا جائز ہے؟

موضوع: عبادات  |  نماز جنازہ   |  احکام میت

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد سلیم       مقام: الہ آباد

سوال نمبر 2752:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ عورت کی نماز جنازہ ادا کرنے سے پہلے ورثاء کا میت کی طرف سے لین دین کا اعلان کرنا جائز ہے یا نہیں۔ نیز ہمارے علاقہ میں نماز جنازہ کے فوری بعد دعا نہ مانگنے کا فتنہ عروج پکڑ رہا ہے، دعا مانگنے کے جواز پر شرعی ثبوت قرآن و حدیث کی روشنی میں مفصل بیان فرما دیں۔ شکریہ

جواب:

عورت ہو یا مرد وقت جنازہ میت کے ورثاء کا میت کی طرف سے لین دین کیے بارے میں پوچھنا ضروری ہے تاکہ اس پر کسی قسم کا بوجھ نہ رہے اور اس کی وراثت تقسیم ہونے سے پہلے پہلے معلوم ہو جائے تاکہ قرض ہو تو اسے ادا کیا جائے اور کسی سے کچھ لینا ہے تو اس کو بھی لے کر تجہیز وتکفین، قرض کی ادائیگی اور وصیت اگر ہے تو پوری کرنے کے بعد وراثت میں شامل کر لیا جائے۔

مزید مطالعہ کے لیے یہاں کلک کریں
کیا نماز جنازہ کے بعد دعا مانگنا شرعی طور پر ثابت ہے؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2013-09-09


Your Comments