معجزہ شق القمر کے وقت سمندری مدوجزر پر کیا اثرات ہوئے ہوں گے؟

سوال نمبر:915
سمندر میں جو مدوجزر پیدا ہوتی ہے وہ چاند اور سورج کی وجہ سے ہوتی ہے لیکن اس وقت سمندر میں کیا ہو تھا جب حضرت محمد صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے انگلی کے اشارے سے چاند کے دو ٹکڑے کیے تھے؟

  • سائل: عرفان احمد خوشحالیمقام: اٹھل بلوچستان
  • تاریخ اشاعت: 22 اپریل 2011ء

زمرہ: اختیارات مصطفی صلی اللہ علیہ وسلم

جواب:
معجزات کا بنیادی مقصد ایمان ہوتا ہے، شق القمر کا معجزہ اہل عرب کو تاجدات کائنات صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کی نبوت و رسالت کی دلیل کے طور پر پیش کیا گیا تھا۔

اگر ہم سائنسی نکتہ نظر سے دیکھیں تو دو ٹکڑوں میں بٹ کر بھی چاند کی کمیت (mass) میں کوئی کمی واقع نہیں‌ ہوئی تھی، اس لئے امکان غالب یہ ہے کہ سمندروں میں اٹھنے والے مدوجزر کی پوزیشن بھی قدرت کے بنائے ہوئے قانون کے مطابق اسی طرح برقرار رہی ہوگی۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: صاحبزادہ بدر عالم جان

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟