Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا تنخواہ پر زکوٰۃ‌ کی ادائیگی ہے؟

کیا تنخواہ پر زکوٰۃ‌ کی ادائیگی ہے؟

موضوع: زکوۃ  |  فرضیت زکوۃ

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد افضل خان       مقام: کرک

سوال نمبر 5198:
کیا تنخواہ پر زکوٰۃ‌ کی ادائیگی ہے؟

جواب:

جب کوئی شخص صاحبِ نصاب ہو اور ایک سال تک اس کا مال نصاب سے کم نہ ہو‘ اگرچہ اس کے مال میں کمی و بیشی ہوتی رہے مگر نصاب سے نیچے نہ آئے تو سال مکمل ہونے پر جتنا مال اس کے پاس ہوگا اس پر زکوٰۃ ادا کی جائے گی۔ خواہ مال تجارت سے کمایا ہو یا تنخواہ سے۔ اگر دورانِ سال ایک دن کے لیے بھی مال نصاب سے کم ہوگیا تو زکوٰۃ کی فرضیت ساقت ہو جائے گی اور دوبارہ صاحبِ نصاب ہونے پر سال کو شمار کیا جائے گا۔ زکوٰۃ کی ادائیگی کے لیے صاحبِ نصاب ہونا اور سال مکمل ہونا شرط ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

تاریخ اشاعت: 2019-04-16


Your Comments