Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - تحیۃ المسجد سے کیا مراد ہے اور کب ادا کی جاتی ہے؟

تحیۃ المسجد سے کیا مراد ہے اور کب ادا کی جاتی ہے؟

موضوع: نماز  |  عبادات  |  نفلی نمازیں

سوال نمبر 515:
تحیۃ المسجد سے کیا مراد ہے اور کب ادا کی جاتی ہے؟

جواب:

مسجد میں داخل ہو کر بیٹھنے سے پہلے دو رکعت نماز نفل ادا کرنے کو تحیۃ المسجد کہتے ہیں۔ اوقات مکروہہ کے سوا ہر وقت پڑھ سکتے ہیں۔

حضرت قتادہ رضی اللہ عنہ سے مروی حدیث مبارکہ میںہے کہ حضور نبی اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا :

’’جو شخص مسجد میں داخل ہو تو اسے چاہئے کہ بیٹھنے سے پہلے دو رکعت نماز پڑھ لے۔‘‘

بخاری، الصحيح، کتاب المساجد، باب اذا دخل المسجد فليرکع رکعتين، 1 : 170، رقم : 433

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔


Your Comments