Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - آن لائن استخارہ کی کیا حقیقت ہے؟

آن لائن استخارہ کی کیا حقیقت ہے؟

موضوع: نماز استخارہ

سوال پوچھنے والے کا نام: آمنہ چوہدری       مقام: فرانس

سوال نمبر 4112:
السلام علیکم! مفتی صاحب مختلف اسلامی ٹی وی چینلز آن لائن استخارہ کے اشتہارات چلاتے ہیں، یہ آن لائن استخارہ کی کیا حقیقت ہے؟

جواب:

استخارہ کا لفط ’خیر‘ سے نکلا ہے جس کا معنیٰ کسی معاملے میں خیر و بھلائی طلب کرنے کے ہیں۔ استخارہ ایک مسنون عمل ہے، جس کا طریقہ اور دعا نبی اکرم صلى اللہ عليہ وآلہ وسلم کی احادیث میں منقول ہے۔ استخارہ کے دو نوافل ہیں جس کی پہلی رکعت میں سورۃ الکافرون اور دوسری رکعت میں سورۃ الاخلاص پڑھنا اور سلام پھیرنے کے بعد دعائے استخارہ پڑھنا سنت ہے۔ ہمارے نزدیک ٹی وی چینلز پر ہونے والے استخارہ کی کوئی حقیقت نہیں۔ استخارہ کا طریقہ جاننے کے لیے ملاحظہ کیجیے:

استخارہ سے راہنمائی کیسے لی جائے؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

تاریخ اشاعت: 2017-02-18


Your Comments