Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - مکروہ اوقات میں‌ قرآنِ مجید کی تلاوت کا کیا حکم ہے؟

مکروہ اوقات میں‌ قرآنِ مجید کی تلاوت کا کیا حکم ہے؟

موضوع: تلاوت‌ قرآن‌ مجید

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد سہیل       مقام: کراچی، پاکستان

سوال نمبر 3785:
السلام علیکم! کیا مکروہ اوقات میں قرآن پڑھا جاسکتا ہے؟ جبکہ ان اوقات میں نماز پڑھنے کی ممانعت ہے۔ جیسے زوال کے وقت یا نمازِ عصر کے بعد۔ قرآن پاک کی تلاوت کر سکتے ہیں

جواب:

تلاوتِ قرآنِ مجید اور دیگر تسبیحات پڑھنے کے لیے کوئی مکروہ اوقات نہیں ہیں۔ آداب کے خیال رکھتے ہوئے، پاکی کی حالت میں جب چاہیں پڑھ سکتے ہیں۔
جواب کی مزید وضاحت کے لیے ملاحظہ کیجیے:

کیا زوال کے وقت تلاوت قرآن اور دیگر تسبیحات پڑھنا جائز ہے؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2016-02-11


Your Comments