Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - روزے کا فدیہ ادا کرنے کے کیا احکام ہیں؟

روزے کا فدیہ ادا کرنے کے کیا احکام ہیں؟

موضوع: روزہ  |  مریض کے روزہ کے احکام   |  روزہ کی قضاء اور کفارہ

سوال پوچھنے والے کا نام: اللہ دتہ       مقام: لاہور

سوال نمبر 3673:
کسی (شرعی معذور )کی طرف سے روزہ رکھنے کی صورت میں روزہ رکھنے والے پر کیا ذمہ داری عائد ہوتی ہے؟

جواب:

انتہائی بڑھاپے اور ایسی بیماریوں میں مبتلاء افراد جن کے صحتیاب ہو کر روزے رکھنے کی امید نہ ہو، ان کے لیے فدیہ دینا جائز ہے۔ ہر روزے کا فدیہ صدقہٴ فطر کے برابر ہے۔ فدیہ رمضان مبارک میں ادا کرنا بہتر ہے، اگر رمضان میں ادا نہ کیا تو بعد میں بھی دیا جاسکتا ہے۔ ایسا بیمار جس کے صحت یاب ہونے کی امید ہو وہ فدیہ ادا نہیں کرے گا، بلکہ تندرست ہو جانے کے بعد بیماری کے دوران چھوڑے گئے رمضان المبارک کے روزوں کی قضاء دے گا۔

ہر مسلمان جو عاقل، بالغ اور صحت مند ہو اس پر روزہ رکھنا فرض ہے۔ کسی دوسرے کو روزے رکھوا نے سے اس کا اپنا فرض ادا نہیں ہوگا۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

تاریخ اشاعت: 2015-07-28


Your Comments