Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا بیوی کی غیرموجودگی میں دی گئی طلاق واقع ہو جاتی ہے؟

کیا بیوی کی غیرموجودگی میں دی گئی طلاق واقع ہو جاتی ہے؟

موضوع: طلاق

سوال پوچھنے والے کا نام: علی       مقام: پاکستان

سوال نمبر 3400:
السلام علیکم! اگر بیوی سامنے نہ ہو اور شوہر تین بار طلاق دے، تو کیا طلاق ہو جائے گی؟

جواب:

اگر بیوی کی غیر موجودگی میں خاوند بلا اکرہ اور سوچ سمجھ کر اپنی بیوی کو طلاق دے تو طلاق واقع ہو جائے گی۔ خواہ بیوی سامنے موجود ہو یا نہ ہو، طلاق زبانی دی ہو یا تحریری یا کوئی بھی طریقہ اختیار کیا گیا ہو۔ خاوند جتنی بار طلاق دے گا اتنی بار ہی واقع ہوگی۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2015-01-15


Your Comments