Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا ہر انسان اپنے نام کے ساتھ عفیٰ عنہ اور غفرلہ لکھ سکتا ہے؟

کیا ہر انسان اپنے نام کے ساتھ عفیٰ عنہ اور غفرلہ لکھ سکتا ہے؟

موضوع: متفرق مسائل

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد رمضان صابری       مقام: پشاور

سوال نمبر 3306:
السلام علیکم! میرا سوال یہ ہے کہ میرے جیسا ایک عام آدمی جو کہ دین کا عالم بھی نہیں‌ صرف اور صرف علماء سے محبت رکھتا ہے، سلسلہ عالیہ صابریہ میں بیعت ہے اور علمائے اہلسنت خاص کر علامہ ڈاکٹر طاہرالقادی کی کتب کا مطالعہ کرتا ہے۔ کیا اپنے نام کے ساتھ عفی عنہ، غفرلہ لکھ سکتا ہے؟

جواب:

عفیٰ عنہ یا غفرلہ ہر مسلمان اپنے نام کے ساتھ لکھ سکتا ہے۔ اس کے لیے نہ تو ممانعت ہے اور نہ ہی عالمِ دین ہونے کی شرط ہے۔ عفیٰ عنہ اور غفرلہ کا معنیٰ ہے کہ اللہ اسے معاف فرمائے یا اللہ اس کی مغفرت فرمائے۔

ہر مسلمان یہ چاہتا ہے کہ اللہ تعالیٰ اس کی لغزشوں کو معاف فرمائے اور اس کی مغفرت ہوجائے۔ اس لیے ہر مسلمان اپنے نام کے ساتھ یہ الفاظ بلا کراہت لکھ سکتا ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-10-31


Your Comments