Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا شریعت میں گواہی دینے کے لیے داڑھی کا ہونا ضروری ہے؟

کیا شریعت میں گواہی دینے کے لیے داڑھی کا ہونا ضروری ہے؟

موضوع: شہادت(گواہی)   |  داڑھی کی شرعی حیثیت

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد کامران       مقام: پاکستان

سوال نمبر 3120:
السلام علیکم! اگر کسی عدالت میں دو گواہوں نے گواہی دی اور قاضی نے ایک کی گواہی کو اس وجہ سے مسترد کر دیا کہ اس کی داڑھی سنّت کے مطابق نہیں‌ ہے،کیا ایسی صورت میں اس کی گواہی کو رد کیا جا سکتا ہے؟ موجودہ معاشرے میں تو داڑھی 70 فیصد لوگوں نے رکھی ہی نہیں‌ ہے۔

جواب:

داڑھی نہ ہونے یا چھوٹی ہونے کی بنا پر کسی کی گواہی رد نہیں کی جا سکتی۔ یہ قول کہ گواہی دینے کے لیے سنت کے مطابق داڑھی ہونی چاہیے، سراسر حماقت پر مبنی ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-04-15


Your Comments