Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا مدرسہ میں‌ اذان کے ساتھ باجماعت نماز پڑھنے سے نماز ہو جائے گی؟

کیا مدرسہ میں‌ اذان کے ساتھ باجماعت نماز پڑھنے سے نماز ہو جائے گی؟

موضوع: عبادات  |  نماز  |  نماز با جماعت

سوال پوچھنے والے کا نام: قاری محمد اقبال قادری       مقام: یو-پی، انڈیا

سوال نمبر 3027:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ کیا مدرسہ میں‌ اذان کے ساتھ نماز باجماعت پڑھنے سے نماز ہو جائے گی؟ طلبہ کی ضرورت کو سمجھتے ہوئے مدرسہ میں‌ اذان اور نماز ادا کر سکتے ہیں؟

جواب:

اگر تو مدرسہ کے قریب مسجد ہے پھر تو اس میں نماز ادا کرنی چاہیے۔ مسجد دور ہے تو پھر یہی بہتر ہے مدرسہ میں مسجد ظاہر کی جائے وہاں اذان بھی کہی جائے اور اہل محلہ بھی وہاں نماز ادا کریں کیونکہ مدرسہ کے طلبہ کے لیے مسجد دور ہو تو اہل محلہ کے لیے بھی دوری ہو گی۔ جب اذان عام ہو گی تو مسجد کے حکم میں تمام لوگ وہیں نماز ادا کریں۔ وگرنہ نماز تو ہو جائے گی لیکن مسجد کا ثواب نہیں ملے گا۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2014-01-10


Your Comments