Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا مقام محبت اور مقام بندگی میں فرق ہے؟

کیا مقام محبت اور مقام بندگی میں فرق ہے؟

موضوع: متفرق مسائل

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد منشا خان       مقام: میانوالی، پاکستان

سوال نمبر 2940:
السلام علیکم! میرا سوال یہ ہے کہ کیا مقام محبت اور مقام بندگی میں فرق ہے؟

جواب:

بندگی وہی معتبر ہے جس کی بنیاد (اللہ، رسول اور صالحین کی)محبت پر ہو۔ جو بندگی مذکورہ ہستیوں کی محبت کے بغیر ہو وہ جھوٹ، دھوکہ، فراڈ اور بے کار ہے۔ قرآن مجید میں ہے:

وَمِنَ النَّاسِ مَن يَتَّخِذُ مِن دُونِ اللّهِ أَندَاداً يُحِبُّونَهُمْ كَحُبِّ اللّهِ وَالَّذِينَ آمَنُواْ أَشَدُّ حُبًّا لِّلّهِ وَلَوْ يَرَى الَّذِينَ ظَلَمُواْ إِذْ يَرَوْنَ الْعَذَابَ أَنَّ الْقُوَّةَ لِلّهِ جَمِيعاً وَأَنَّ اللّهَ شَدِيدُ الْعَذَابِ.

اور لوگوں میں بعض ایسے بھی ہیں جو اﷲ کے غیروں کو اﷲ کا شریک ٹھہراتے ہیں اور ان سے”اﷲ سے محبت“ جیسی محبت کرتے ہیں، اور جو لوگ ایمان والے ہیں وہ (ہر ایک سے بڑھ کر) اﷲ سے بہت ہی زیادہ محبت کرتے ہیں، اور اگر یہ ظالم لوگ اس وقت کو دیکھ لیں جب (اُخروی) عذاب ان کی آنکھوں کے سامنے ہوگا (توجان لیں) کہ ساری قوتوں کا مالک اﷲ ہے اور بیشک اﷲ سخت عذاب دینے والا ہے۔

البقرہ، 2 : 165

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2013-11-18


Your Comments