Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا دو بیویوں کو ایک گھر میں‌ رکھنا جائز ہے؟

کیا دو بیویوں کو ایک گھر میں‌ رکھنا جائز ہے؟

موضوع: حقوق نسواں   |  معاملات

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد محمود صدیقی       مقام: کراچی

سوال نمبر 2588:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہےکہ میں دوسری شادی کرنا چاہتا ہوں کیا میں دونوں بیویوں کو ایک گھر میں الگ الگ کمروں میں رکھ سکتا ہوں کیوں کہ میں الگ گھر میں رکھنے کی استطاعت نہیں رکھتا ہوں جبکہ دونوں بیویاں ایک گھر میں رہنے کے لیے بخوشی راضی ہیں۔ رہنمائی فرمائیں۔

جواب:

دونوں بیویوں کو الگ الگ کمروں میں ایک ہی گھر میں رکھ سکتے ہیں، اس میں کوئی ممانعت نہیں ہے۔ لیکن ان کے درمیان مساوی سلوک رکھیں اور ان دونوں کے حقوق پورے کریں، ان میں سے کسی کے ساتھ ظلم نہ ہو۔ اگر دونوں ایک گھر میں رہنے پر راضی ہیں یہ تو بہت اچھا ہے۔ ورنہ درمیان میں ایک دیوار کھڑی کر کے الگ الگ رکھ سکتے ہیں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2013-05-22


Your Comments