کیا شدید غصہ کی حالت میں طلاق واقع ہو جاتی ہے؟

سوال نمبر:2522
میرا سوال یہ ہے کہ غلام حسین ولد بخت علی سکنہ شہر سلطان نے گھریلو جھگڑے کے دوران شدید غصہ کی حالت میں اپنی بیوی کو تین طلاقیں اکٹھی دے دی ہیں۔ کیا طلاق واقع ہو چکی ہے؟ رہنمائی فرمائیں۔جزاک اللہ

  • سائل: حافظ محمد طاہرمقام: ملتان، پاکستان
  • تاریخ اشاعت: 19 اپریل 2013ء

زمرہ: طلاق

جواب:

اگر تو واقعی غصہ اتنا زیادہ تھا کہ آپ کو اپنے آپ پر کنٹرول نہیں تھا تو ایسی صورت میں طلاق واقع نہیں ہوئی، لیکن غصہ کی شدید حالت کا تعین آپ نے کرنا ہے، ہمیں معلوم نہیں۔

مزید مطالعہ کے لیے یہاں کلک کریں
کیا انتہائی غصہ میں طلاق واقع ہو جاتی ہے؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟