Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا حلال و حرام میں فرق نہ کرنے والے ہوٹل میں کام کرنا جائز ہے؟

کیا حلال و حرام میں فرق نہ کرنے والے ہوٹل میں کام کرنا جائز ہے؟

موضوع: معاملات  |  زنا و بدکاری   |  شراب نوشی

سوال پوچھنے والے کا نام: انور طاہر       مقام: یو اے ای

سوال نمبر 2278:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ کیا ایسے ہوٹل میں کام کرنا جائز ہے جہاں پتہ ہو کہ وہاں سب غلط کام ہوتے ہیں جیسے شراب اور زنا وغیرہ؟

جواب:

اگر آپ غلط کام نہیں کرتے اور صرف یہ بات ہے کہ اس ہوٹل میں غلط کام ہوتے ہیں تو آپ ملازمت کرتے رہیں، اس میں ہوٹل کے مالکان گنہگار ہونگے، آپ نہیں۔ اور اگر آپ کو ایسے کاموں میں ملوث ہونے کا خطرہ ہے تو آپ کوشش کریں کسی دوسری جگہ ملازمت تلاش کریں اور جتنی دیر کسی اچھی جگہ نوکری نہیں ملتی اس کو جاری رکھیں۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: عبدالقیوم ہزاروی

تاریخ اشاعت: 2012-10-24


Your Comments