فوت شدہ کی جگہ کسی دوسرے کا بنک سے پنش لینا کیسا ہے؟

سوال نمبر:2157
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ ہماری امی کو ہمارے والد کی پنشن ملتی تھی لیکن میری امی وفات پا گئی ہیں، ہم اس پنشن سے گھر کا خرچہ چلاتے تھے، کیا اب ہم اپنی امی کی جگہ بنک سے وہ پنشن لے سکتے ہیں؟ کیا ایسا کرنا جائز ہے؟

  • سائل: ظہیر عباسمقام: کراچی، پاکستان
  • تاریخ اشاعت: 28 ستمبر 2012ء

زمرہ: جدید فقہی مسائل

جواب:

اگر متعلقہ محکمہ والے قانونا والدین کی وفات کے بعد بھی اولاد کو پنشن دیتے ہیں تو جائز ہے۔ آپ لے سکتے ہیں۔ اس کے برعکس اگر محکمہ کے قانون کے مطابق آپ کی والدہ کی وفات کے بعد پنشن نہیں ملتی لیکن آپ نے ان کو اس کی وفات کی اطلاع نہیں دی تو پھر آپ کے لیے پنشن لینا جائز نہیں ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟