Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - فوت شدہ کی جگہ کسی دوسرے کا بنک سے پنش لینا کیسا ہے؟

فوت شدہ کی جگہ کسی دوسرے کا بنک سے پنش لینا کیسا ہے؟

موضوع: جدید فقہی مسائل

سوال پوچھنے والے کا نام: ظہیر عباس       مقام: کراچی، پاکستان

سوال نمبر 2157:
السلام علیکم میرا سوال یہ ہے کہ ہماری امی کو ہمارے والد کی پنشن ملتی تھی لیکن میری امی وفات پا گئی ہیں، ہم اس پنشن سے گھر کا خرچہ چلاتے تھے، کیا اب ہم اپنی امی کی جگہ بنک سے وہ پنشن لے سکتے ہیں؟ کیا ایسا کرنا جائز ہے؟

جواب:

اگر متعلقہ محکمہ والے قانونا والدین کی وفات کے بعد بھی اولاد کو پنشن دیتے ہیں تو جائز ہے۔ آپ لے سکتے ہیں۔ اس کے برعکس اگر محکمہ کے قانون کے مطابق آپ کی والدہ کی وفات کے بعد پنشن نہیں ملتی لیکن آپ نے ان کو اس کی وفات کی اطلاع نہیں دی تو پھر آپ کے لیے پنشن لینا جائز نہیں ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

تاریخ اشاعت: 2012-09-28


Your Comments