کیا بندہ اللہ تعالیٰ‌ کا دیدار کر سکتا ہے؟

سوال نمبر:1691
کیا بندہ اللہ تعالیٰ‌ کا دیدار کر سکتا ہے؟ سوتے ہوئے خواب میں یا حالت بیداری میں۔ کیوں کہ اکثر نیک سیرت لوگوں کے بارے میں لکھا پڑھا ہے کہ ان کو اللہ تعالیٰ‌ نے اپنا دیدار عطا کیا۔ اس بارے میں تفصیلی جواب دیں۔ شکریہ

  • سائل: محمد جاوید انورمقام: پاکپتن شریف
  • تاریخ اشاعت: 23 اپریل 2012ء

زمرہ: ایمان باللہ

جواب:

خواب کی حالت میں اس دنیا میں اللہ تعالی کا دیدار ہو سکتا ہے، بیداری کی حالت میں نہیں، بیداری کی حالت میں صرف حضور علیہ الصلاۃ والسلام نے دیدار الہی کیا، اس کے علاوہ کسی کو یہ سعادت نصیب نہ ہوئی۔ البتہ بروز قیامت، اللہ تعالی ہر جنتی شخص کو اپنا دیدار حالت بیداری میں کروائے گا۔ قرآن نے اس بات کو یوں بیان فرمایا :

وُجُوهٌ يَوْمَئِذٍ نَّاضِرَةٌ.

بہت سے چہرے اُس دن شگفتہ و تروتازہ ہوں گے

 إِلَى رَبِّهَا نَاظِرَةٌ.

اور (بلا حجاب) اپنے رب (کے حسن و جمال) کو تک رہے ہوں گے

سورة القيامة 22. 23

اسی طرح مختلف مقامات پر احادیث نبویہ میں بھی اس کا ذکر آیا ہے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: حافظ محمد اشتیاق الازہری

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • کاروباری شراکت کے اسلامی اصول کیا ہیں؟
  • وطن سے محبت کی شرعی حیثیت کیا ہے؟