Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا سود کا پیسہ مسجد کو دیا جاسکتا ہے؟

کیا سود کا پیسہ مسجد کو دیا جاسکتا ہے؟

موضوع: مسجد   |  سود

سوال پوچھنے والے کا نام: یاور اقبال       مقام: فیصل آباد

سوال نمبر 1576:
السلام علیکم مفتی صاحب، کیا بنک سے ملنے والا سود کا پیسہ مسجد کو دیا جاسکتا ہے؟ مسجد کے علاوہ اور کن مقاصد کے لیے سود کا پیسہ استمعال کیا جا سکتا ہے؟

جواب:

سود کا پیسہ مسجد کو دیا جا سکتا ہے، اس کے علاوہ کسی بھی فلاحی کام کے لیے بھی دے سکتے ہیں۔ لیکن اس کا ثواب نہیں ملے گا۔ البتہ کسی دوسرے کا بھلا ہو جائے گا۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: حافظ محمد اشتیاق الازہری

تاریخ اشاعت: 2012-04-02


Your Comments