Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - کیا اولاد کے لیے کسی دوسری عورت سے بیضہ لینا جائز ہے؟

کیا اولاد کے لیے کسی دوسری عورت سے بیضہ لینا جائز ہے؟

موضوع: جدید فقہی مسائل  |  اسقاط حمل/عزل

سوال پوچھنے والے کا نام: ظہور احمد ارشد       مقام: سڈنی، آسٹریلیا

سوال نمبر 1501:
اگر کسی عورت کو یائسہ ہونے کی بناء پر حیض آنا بند ہو جائے تو کیا وہ بجہ پیدا کرنے کے لئے IVF ٹیکنالوجی کی مدد سے کسی دوسری عورت کا بیضہ لے سکتی ہے؟ اور کیا والدین کی طرف سے اولاد نرینہ کے حصول کے لئے بچے کی جنس کا اختیار [gender selection] جائز ہے؟

جواب:

اس سوال کا جواب گزر چکا ہے
مطالعہ کے لیے یہاں کلک کریں

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

تاریخ اشاعت: 2012-03-08


Your Comments