Fatwa Online

کیا غسل جنابت کے چھینٹے پڑنے سے کپڑے ناپاک ہوجاتے ہیں؟

سوال نمبر:4783

السلام علیکم مفتی صاحب! میرا سوال یہ ہے کہ غسل جنابت کرتے وقت پانی کے چھینٹے پاک کپڑوں پر پڑنے سے کیا پاک کپڑے ناپاک ہوجاتے ہیں؟

سوال پوچھنے والے کا نام: ایاز محبوب

  • مقام: پاکستان
  • تاریخ اشاعت: 30 مارچ 2018ء

موضوع:غسل   |  طہارت

جواب:

جب جسم ناپاک ہو اور طہارت حاصل کرنے کے لیے پانی بہایا جائے وہ پانی ناپاک ہوتا ہے۔ اس کے چھینٹے لگنے سے کپڑے ناپاک ہو جاتے ہیں۔ کپڑے ایسی جگہ رکھے جائیں جہاں پانی کے چھینٹے ان پر نہ پڑیں۔ طہارت حاصل کر لینے کے بعد پڑنے والے چھنیٹے یا کپڑے پہنتے وقت جسم پر موجود پانی کے قطرے کپڑوں کو ناپاک نہیں کرتے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی:محمد شبیر قادری

Print Date : 30 September, 2022 08:37:35 PM

Taken From : https://www.thefatwa.com/urdu/questionID/4783/