کیا لاؤڈ اسپیکر کے ساتھ نماز ہو جاتی ہے؟

سوال نمبر:747
کیا لاؤڈ اسپیکر کے ساتھ نماز ہو جاتی ہے؟

  • سائل: سمیر‌ اسمعیلمقام: ممبئی، انڈیا
  • تاریخ اشاعت: 11 مارچ 2011ء

زمرہ: نماز

جواب:

لاؤڈ اسپیکر کے ساتھ نماز ہوجاتی ہے اس میں کوئی حرج نہیں ہے، اس لیے کہ وہ مکبرکے قائمقام ہے۔ مکبر سے مراد وہ شخص ہے جو امام کے پیچھے کھڑا ہو کر اونچی آواز میں اللہ اکبر اور ربنا لک الحمد پڑھتا ہے تاکہ پیچھے نمازیوں کو آواز پہنچ سکے، اس لیے مکبر بنانا جائز ہے۔ البتہ اس بات کا خیال رکھنا چاہیے کہ لاؤڈ اسپیکر سے نماز ادا کرتے وقت کوئی عمل کثیر نہ ہو یعنی امام صاحب دوران نماز مائک کو بار بار درست نہ کریں۔ وغیرہ وغیرہ۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: صاحبزادہ بدر عالم جان

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟