Fatwa Online Durood-e-Minhaj
Home Latest Questions Most Visited Ask Scholar
   
فتویٰ آن لائن - جس ملک کے شہری نےگستاخئ رسول (ص) کی ہو اس کےمعاشی بائیکاٹ‌ کا کیا حکم ہے؟

جس ملک کے شہری نےگستاخئ رسول (ص) کی ہو اس کےمعاشی بائیکاٹ‌ کا کیا حکم ہے؟

موضوع: ناموس رسالت صلی اللہ علیہ وسلم  |  جدید فقہی مسائل

سوال پوچھنے والے کا نام: محمد آصف قادری       مقام: کراچی

سوال نمبر 3553:
السلام علیکم! میں یہ جاننا چاہتا ہوں کہ میں ٹیلی نار کی سم استعمال کرنا چاہتا ہوں، جبکہ ٹیلی نار کی سم ڈنمارک کے ایک شہری کی ہے۔ ڈنمارک ہی کے ایک شہری نے سرکار ﷺ کی خاکوں کی صورت میں گستاخی کی تھی۔ اب آپ بتائیں کہ کیا حکم ہے؟

جواب:

اگر کسی شخص کے انفرادی عمل کو بنیاد بنا کر اس کے ملک سے تعلقات منقطع کرلیے جائیں یا اس ملک کی اشیاء کو استعمال نہ کیا جائے تو کیا وہ شخص اس برے عمل سے رک جائے گا؟ نہیں! یقیناً نہیں، بلکہ اس طرح تو ہم نے اسے کھلی چھٹی دے دی کہ وہ جو چاہے کرے ہم تو اپنے گھر میں بیٹھ کر اس کا بائیکاٹ کر کے اپنی ذمہ داری پوری کر رہے ہیں۔ ایسے لوگوں کو گستاخئ رسول سے روکنے کا طریقہ عالمی سطح پر قانونی چارہ جوئی کر کے ان کا محاسبہ کرنا ہے۔

ٹیلی نار کی سم استعمال کرنے یا نہ کرنے سے گستاخ شخص کو کوئی فرق نہیں پڑے گا۔ اس لیے اگر آپ ٹیلی نار کی سم استعمال کرتے ہیں تو آپ گنہگار نہیں ہوں گے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی: محمد شبیر قادری

تاریخ اشاعت: 2015-04-06


Your Comments