اِطاعت حق میں کمال کیا ہے؟

سوال نمبر:186
اِطاعت حق میں کمال کیا ہے؟

  • تاریخ اشاعت: 21 جنوری 2011ء

زمرہ: روحانیات  |  روحانیات  |  روحانیات

جواب:

اللہ اور رسول کی اطاعت ایمان کا تقاضا ہے اور اس کی بجاآوری میں کمال حاصل کرنا مقصود ایمان ہے۔ ایمان اگر عقیدہ ہے تو اطاعت اس کے تقاضے پورے کرنے کی تصدیق، ارشاد باری تعالیٰ ہے :

يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُواْ أَطِيعُواْ اللّهَ وَأَطِيعُواْ الرَّسُولَ.

’’اے ایمان والو! اللہ کی اور رسول کی اطاعت کرو۔‘‘

 النساء، 4 : 59

اطاعت حق کے کمال تک پہنچنے کی کيفیت یہ ہے کہ زندگی احکام الٰہی کی اس قدر پابند ہوجائے کہ اﷲ کے حکم کی نافرمانی کا تصور بھی کبھی دھیان میں نہ آنے پائے۔ جذبہ اطاعت رگ و ریشہ میں کچھ اس طرح سما جائے کہ بھول کر بھی ارادی و اختیاری یا بے خیالی و اضطراری حالت میں بھی بندہ کا قدم اطاعت حق کے خلاف نہ اٹھنے پائے۔

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

اہم سوالات
  • بٹ کوئن کی ٹریڈنگ کا کیا حکم ہے؟
  • قطع تعلقی کرنے والے رشتے داروں سے صلہ رحمی کا کیا حکم ہے؟
  • مزارات پر پھول چڑھانے اور چراغاں کرنے کا کیا حکم ہے؟