Fatwa Online

رجب کے کونڈوں کی شرعی حیثیت کیا ہے؟

سوال نمبر:3910

رجب کے کونڈے بنانا کیسا ہے؟ اور شرعیت میں اس کا حکم ہے؟

سوال پوچھنے والے کا نام: عکرمہ ظفیر

  • مقام: گیا، بہار (انڈیا)
  • تاریخ اشاعت: 23 اپریل 2016ء

موضوع:ایصال ثواب

جواب:

کونڈوں کی اصل ایصال ثواب ہے اور ایصال ثواب کے جواز پر بےشمار دلائل ہیں۔ یہ ایصالِ ثواب امام جعفر الصادق رضی اللہ عنہ کے لیے کیا جاتا ہے جوکہ جائز ہے۔ 22 رجب کو جو کونڈے پکائے اور بھرے جاتے ہیں ان کی بعض باتیں درست ہیں اور بعض غلط۔ ہمارے ہاں بعض جہلاء نے کونڈوں کے بارے میں جو بیہودہ قیدیں اپنی طرف سے لگا رکھی ہیں وہ درست نہیں۔ مثلاً اس موقع پر ایک چھوٹی کتاب بی بی فاطمہ کا معجزہ یا کونڈوں کے متعلق عجیب و غریب حکایتیں جو پڑھی اور بیان کی جاتی ہیں سب غلط اور جھوٹ کا پلندہ ہیں۔ اس سے پرہیز کرنا چاہیے۔ مزید وضاحت کے لیے ملاحظہ کیجیے:

کیا رجب کے کونڈے جائز ہیں‌؟

واللہ و رسولہ اعلم بالصواب۔

مفتی:محمد شبیر قادری

Print Date : 05 December, 2020 06:59:02 PM

Taken From : https://www.thefatwa.com/urdu/questionID/3910/